10جنوری کے حکم نامے کے بعدویکسین کے مکمل ہونے اور گرین پاس کے حوالے سے : نئے قوانین

Share on facebook
Share on twitter
Share on linkedin
Share on telegram

obbligo vaccino over 50

10جنوری 2022کو ویکسین اور گرین پاس کے حوالے سے نئے قوانین کا حکم نامہ جاری کیا گیا تھا۔ کس کو لازمی ویکسین لگوانی ہو گی؟کب سپر گرین پاس کی ضرورت پڑ سکتی ہے اور کن جگہوں پر صرف گرین پاس استعمال کیا جا سکتا ہے؟آئیے یہاں آپ کو ہم ان تمام خاص قوانین کے بارے میں تفصیل سے بتاتے ہیں جن کی پابندی 31مارچ 2022تک یا پھر جب تک خطرناک صورت حال جاری رہے گی تک عائد رہے گی۔ 

سب سے پہلے، 10جنوری 2022سے کوویڈ 19کی ویکسین کی تیسری ڈوز کی معیاد میں کمی کر دی گئی ہے: اب یہ دوسری ڈوز لگوانے کے چارماہ بعد لگوائی جا سکتی ہے، جبکہ پہلے اس کے لیے 5ماہ تک انتظار کرنا پڑتا تھا۔ یکم فروری 2022سے گرین پاس کی معیاد 9ماہ سے 6ماہ کر دی گئی ہے۔ 

مختلف عمر کے لوگوں کے لیے مختلف قوانین لاگو ہوں گے: دیکھتے ہیں کو ن سے والے۔

50سال سے زائد والوں کے لیے

نیا حکم نامہ مندرجہ ذیل لوگوں کے لیے ویکسین لازمی قرار دیتا ہے:

تمام وہ اطالوی شہری اور غیر ملکی رہائشی جن کی عمر کم از کم 50سال ہے (یا وہ جو 15جنوری تک پچاس سال کے ہو جائیں گے، جو اٹلی میں رہائش پذیر ہیں اور وہ قومی طبی سہولیات کے لیے رجسٹرڈ ہیں)۔ 

ان  لوگوں کو ویکسین لگوانے کی ضرورت نہیں ہے جن کے پاس ان کے ڈاکٹرکی جانب سے طبی سرٹیفیکیٹ موجود ہو گا۔ اے ایس ایل اگر وہ خاندانی ڈاکٹر کے ساتھ متفق ہو گا تو وہ سارس کوویڈ19 کی ویکسین نا لگوانے کا سرٹریفیکٹ حکومتی محکمہ صحت کی اجازات سے جاری کرے گا۔ 

تمام وہ ملازمین جن کی عمر 50سا ل سے زائد ہو گی 15فروری 2022سے سپر گرین پاس کے بغیر کام پر نہیں جا سکیں گے۔ اگر وہ اس کے بغیر کام پر جائیں گے تو ان کی غیر حاضری جانی جائے گی، اور اس دن کا معاوضہ بھی نہیں ملے گا۔ لیکن اس کی کوئی اور سزا نہیں ملے گی اور جب تک وہ کام پر واپس نہیں آئیں گے ان کی جگہ کسی اور کو نہیں رکھا جائے گا۔ 

15فروری 2022سے 15جون 2022تک سپر گرین پاس کا کام کی جگہ پر جانے کے لیے لازمی قرار دیا جائے گا۔ یہ تما م ذاتی کام کرنے والوں یا پھر جو دوسروں کے پاس جا کر کام کرتے ہیں کے لیے بھی لازمی ہو گا۔ جب بھی کو ئی کسی کے گھر کام کے لیے جائے گا یا پھر جیسے دوسرے دفترروں میں لاگو ہوتا ہے ایسے ہی جب وہ کسی کے دفتر میں بھی جائیں گے لازمی ہو گا۔ 

بنیادی گرین پاس

20جنوری 2022سے مندرجہ ذیل کے لیے لازمی ہوگا:

– حجام ، بیوٹی پارلر اور تمام ایسے ادارے

یکم فروری 2022سے مندرجہ ذیل جگہوں کے لیے لیے بنیادی گرین پاس کی ضرورت ہو گی:

-بینکوں میں داخلے کے لیے

-ڈاک خانے میں داخلے کے لیے

-دکانوں میں داخلے کے لیے سوائے کھانے پینے کی اشیا کی دکانوں اور فارمیسی کے۔

سپر گرین پاس

10جنوری سے مندرجہ ذیل کے لیے لازمی ہو جائے گا:

-کسی بھی قسم کی پبلک ٹرانسپورٹ میں سواری کے لیے

-پبلک والی کسی بھی جگہ پر جیسے کہ بار، کافی شاپ، ریسٹورینٹ ، میوزیم اور ہوٹل وغیرہ

-سویمنگ پول اور جم جانے کے لیے

ویکسین کے بغیر والے

جس کو ویکسین نہیں لگی ہوئی اس کو پہلی ڈوز 31جنوری 2022سے پہلے لگوانی ہوگی تک کہ 15فروری 2022سے اس کے پاس سپر گرین پاس موجود ہو سکے۔ 

اگر کسی نے پھر بھی ویکسین نہ لگوائی تو یکم فروری2022 سے اس کے لیے مندرجہ ذیل کا استعمال اور داخلہ ممنوع ہو گا:

– کسی بھی قسم کی پبلک ٹرانسپورٹ کا استعمال

-بار اور ریسٹورینٹ میں داخلہ

-ہوٹلوں اور میوزیم میں داخلہ

-سویمنگ پول اور جم میں داخلہ

وہ لوگ جن کو  ویکسین نہیں لگی ہو گی  صرف ان دکانوں میں داخل ہو سکیں گے جو بنیادی ضروریات یا ضروری مصنوعات فروخت کرتے ہیں، جیسے کہ فارمیسی، سپر مارکیٹ، تمباکو نوشی اور ہارڈویئر اسٹوروغیرہ۔

قوانین کا احترام نہ کرنے والوں کے لیے جرمانہ

ویکسین کی ذمہ داری آئندہ 15 جون تک عائد  رہے گی۔ یکم فروری 2022 سے، ان لوگوں کو100 یورو کا جرمانہ ہو گا جنہوں نے ویکسین نہیں لگوائی ہو گی۔ اس کی چیکنگ ریونیو ایجنسی کی طرف سے کی جائے گی، جو ہیلتھ کارڈ اور رجسٹری آفس سے ڈیٹا کا حوالہ دے گی۔ ایسے کارکنوں کے لیے بھی جرمانے ہیں جو ویکسین کی ذمہ داری کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کام کی جگہوں پر داخل ہوں گے۔ دفعات کی خلاف ورزی پر 600 اور 1500 یورو کے درمیان کا جرمانہ ہو گا۔ کاروباری مالکان جو چیکنگ کی تعمیل کرنے میں ناکام رہیں گے، پر  400 سے 1000 یورو تک کا جرمانہ عائد  ہوگا۔

 1,233 Visite totali,  5 visite odierne